کریلے کا پانی اور ۔ ۔ ۔ ۔ ۔! ایکنی کا جڑ سے خاتمہ

کریلا ذائقے میں تو کڑوا ضرور ہوتا ہے لیکن اس کے استعمال سے صحت پر اس کے انتہائی مثبت اثرات مرتب ہوتے ہیں، خاص طور پر چہرے کے دانوں کے علاج کیلیے بے حد مفید ہے۔

نوجوانی میں چہرے پر نکلنے والے دانے جسے ایکنی بھی کہا جاتا ہے جِلد کا سب سے عام طبی مسئلہ ہے جو کہ دنیا بھر کے پچاسی فیصد نوجوانوں کو اپنا شکار بناتا ہے اور اس مسئلے سے نجات پانا قدرے مشکل ہوتا ہے۔

اے آر وائی ڈیجیٹل کے پروگرام گڈ مارننگ پاکستان میں ڈاکٹر عائشہ نے ایکنی کے خاتمے کیلیے کریلے کے پانی کے استعمال کا طریقہ بیان کیا۔

انہوں نے بتایا کہ جِلد کی یہ بیماری اس وقت لاحق ہوتی ہے جب جِلد کے فولیکلز تیل اور ڈیڈ سیلز کی وجہ سے بلاک ہو جاتے ہیں، بہت سارے لوگوں کو ایکنی کا سامنا عمر بھر کے لیے بھی کرنا پڑتا ہے۔

اس کیلئے ضروری ہے کہ اگر آپ کو گردوں کا کوئی عارضہ لاحق نہیں تو زیادہ سے زیادہ پانی پئیں، چہرے کی تازگی اور گِلو کیلیے سبزیوں اور پھلوں کا جوس سب سے بہترین ہے۔

ڈاکٹر عائشہ کا کہنا تھا کہ جلد کی تمام بیماریوں کا تعلق ہمارے خون میں فاسد مادوں یا دیگر خرابیوں اور قبض کی وجہ سے ہوتا ہے لہٰذا خون کی صفائی کیلئے کریلا بہت مفید سبزی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ رات کو کریلا کاٹ کر اسے ابال لیں اور سونے سے پہلے چھان کر اس کا پانی پئیں تو آپ کے خون سے فاسد مادوں کا خاتمہ ہوجائے گا، اور پرانی سے پرانی ایکنی اور پمپلز سے نجات مل جائے گی اور اس سے وزن میں بھی کمی آے گی۔

انہوں نے کہا کہ اس کے علاوہ قبض کی وجہ سے بھی ایکنی کا مسئلہ درپیش ہوتا ہے، قبض کے علاج کیلئے ایک ایک چمچ سونف، زیرہ اور تھوڑی سی دار چینی ابال کر اس کا پانی پینے سے بھی ایکنی جڑ سے ختم ہوجائے گی۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
نوٹ : مندرجہ بالا تحریر معالج کی عمومی رائے پر مبنی ہے، کسی بھی نسخے یا دوا کو ایک مستند معالج کے مشورے کا متبادل نہ سمجھا جائے۔

Comments





Source link

اپنا تبصرہ لکھیں